پبلک ٹرانسپورٹ کے داخلے پر پابندی عائد

کورونا کیسز میں اضافہ، موٹر وے پر پبلک ٹرانسپورٹ کے داخلے پر پابندی عائد

فیصل آباد ( 4 ستمبر 2021) کورونا کی نئی لہر میں تشویشناک اضافہ، موٹر وے پر پبلک ٹرانسپورٹ کے داخلے پر پابندی عائد کر دی گئی۔ تفصیلات کے مطابق کورونا کی لہر ایک بار پھر زور پکڑنے لگی، فیصل آباد سے ملتان موٹر وے پبلک ٹرانسپورٹ کے لیے بند کر دی گئی۔ترجمان موٹر وے کے مطابق کورونا وائرس کےپیش نظر پبلک ٹرانسپورٹ بند کی گئی، 4 ستمبر سے پبلک ٹرانسپورٹ کا داخلہ ممنوع ہے۔پرائیویٹ گاڑیوں کو موٹروے پر سفر کرنے کی اجازت ہوگی۔ یائےخوردونوش اور تیل سپلائی کی گاڑیاں بھی سفر کر سکیں گی، انہیں محدود عملے اور ایس اوپیز پر عمل درآمد سے سفر کی اجازت ہوگی۔ترجمان کا کہنا ہے کہ موٹر وے پر پابندی این سی او سی کی ہدایات کے مطابق لگائی گئی ہے۔این سی او سی نے گزشتہ روز وفاقی دارالحکومت اسلام آباد اور لاہور سمیت ملک کے 24 شہروں میں نئی پابندیاں نافذ کر دی تھیں۔ ذرائع کے مطابق این سی او سی کی جانب سے کیے جانے والے فیصلے کے تحت نئی پابندیاں منتخب اضلاع میں 4 سے 12 ستمبر تک کے درمیانی عرصے میں نافذ رہیں گی۔این سی او سی کی جانب سے اس ضمن میں کہا گیا ہے کہ منتخب اضلاع میں تعلیمی ادارے بند رہیں گے اور 24 شہروں میں انٹرسٹی ٹرانسپورٹ کی آمد و رفت پر بھی پابندی ہوگی۔نجی ٹی وی کے مطابق این سی او سی نے ان ڈور اور آؤٹ ڈور تمام تقاریب کے انعقاد پر پابندی عائد کردی ہے اور شادی بیاہ کی تقاریب کو 300 افراد کی تعداد سے مشروط کردیا ہے۔اس سلسلے میں واضح کیا گیا ہے کہ شادی بیاہ کی تقاریب کا انعقاد صرف آؤٹ ڈور کیا جا سکے گا۔ 24 شہروں میں انڈور جم پر بھی پابندی عائد کی گئی ہے۔جن اضلاع میں نئی پابندیاں عائد کی گئی ہیں ان میں اسلام آباد، راولپنڈی، سرگودھا، خوشاب، میانوالی، رحیم یار خان، گجرات، گوجرانوالہ، ملتان، بہاولپور، لاہور، شیخوپورہ، بھکر، خانیوال، سیالکوٹ اور فیصل آباد شامل ہیں۔پابندی والے اضلاع میں ہری پور، مالا کنڈ، مانسہرہ ، صوابی ، ڈی آئی خان ، سوات ، ایبٹ آباد اور پشاور بھی شامل ہیں۔دوسر ی جانب وزیرصحت پنجاب نے کورونا پر قابو پانے کیلئے اگلے20 دن اہم قرار دے دیے، ڈاکٹر یاسمین راشد نے کہا کہ کورونا پر قابو پانے کیلئے آئندہ 20 دن بہت اہم ہیں، ہسپتالوں میں زیرعلاج 88 فیصد لوگ نان ویکسی نیٹڈ ہیں، ویکسی نیشن اور احتیاطی تدابیر سے ہی بچا جاسکتا ہے۔وزیر صحت پنجاب ڈاکٹر یاسمین راشد اور چیف سیکریٹری پنجاب کی زیر صدارت اجلاس ہوا، اجلاس میں کورونا وبا کی صورتحال، سپتالوں میں طبی سہولیات کی فراہمی اور ویکسی نیشن اہداف کا جائزہ لیا گیا، اجلاس میں فیصلہ کیا گیا کہ 15ہائی رسک اضلاع میں پابندیوں پر سختی سے عملدرآمد کرایا جائے گا۔یاسمین راشد نے کہا کہ کورونا کی چوتھی لہرپر قابو پانے کیلئے اگلے 15 سے 20 دن نہایت اہم ہیں۔

Sharing is caring!

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *