ٹیکس عائد کرنے کی تجویز

”حکومت کی جانب سے بجلی پر چلنے والی گاڑیوں پر بھی ٹیکس عائد کرنے کی تجویز“

اسلام آباد (آن لائن)حکومت کی جانب سے بجلی پر چلنے والی گاڑیوں پر بھی ٹیکس عائد کرنے کی تجویزبجلی سے چلنے والی گاڑیوں پرچارجنگ ٹیرف لگے گاالیکٹریکل وہیکل پر پینتالیس روپے تک چارجنگ ٹیرف لگانے کی تجویز سامنے آگئی ہے تفصیلات کے مطابق نیپرا میں ای وہیکل چارجنگ ٹیرف کے حوالے سے ازخود سماعت ہوئی سماعت میں مارکیٹ سے وابستہ افراد، صارفین سمیت اسٹیک ہولڈرز نے شرکت کی چئیرمین نیپرا توصیف ایف فاروقی نے ریمارکس میں کہا کہ کوشش ہو گی چارجنگ ٹیرف پٹرول کی نسبت انتہائی کم ہو،الیکٹرک وہیکل چارجنگ کا میکسیمم کیپ طے کیا جائے گاای وی اسٹیشنز طےکردہ قیمت سے زیادہ چارج نہیں کر سکیں گے نیپرا ہیڈآفس میں دوران سماعت نیپرا حکام نے بتایا کہ ایک الیکٹرک وہیکل کو چارج کرنے پر 40 یونٹ خرچ ہوں گے،ورکنگ کے مطابق ای وہیکل چارجنگ ٹیرف 45 روپے 8 پیسے فی یونٹ بنتے ہیں ایک یونٹ پر گاڑی کی اوسط مسافت 12 کلومیٹر بنتی ہے،جس پر نیپرا اتھارٹی نیمارکیٹ سے وابستہ افراد سے ایک ہفتے تک آراء مانگ لیں چئیرمین نیپراکا کہنا تھا کہ فیصلے سے پہلے تمام فریقین کی تجاویز کا جائزہ لیا جائے گاہمارا کام صارف کے تحفظ کیساتھ سرمایہ کاروں کی حوصلہ افزائی بھی کرنا ہے،فریقین کے تجاویز پر غور کے بعد اتھارٹی فیصلہ جاری کرے گی واضح رہے کہ حکومت کی جانب سے ای وہیکل پالیسی منظور کی گئی ہے اور وفاقی دارالحکومت میں دو پیٹرول پمپس پر الیکٹرک وہیکل چارجنگ مشینز نصب کی گئی ہیں حکومت کی جانب سے ای وہیکل پالیسی کے انعقاد کا مقصد ماحول کو بہتر بنانا ہے اگر دوسری دنیا کیا بات کی جائے تو بہت سارے مغربی ممالک نے ٹائم فریم دیا ہے جس کے بعد دنیا کے بیشتر ممالک میں ڈیزل اور پیٹرول سے چلنے والی گاڑیوں کا داخلہ منع ہوجائیگی پاکستانی حکومت کی بھی کوشش ہے کہ 2035 تک ملک میں 30 سے 40 فیصد گاڑیاں بجلی سے چلنے والی ہوں ملک میں ٹو وہیل الیکٹرک موٹر بائیک بننا اور استعمال ہونا شروع ہوگئے ہیں۔

Sharing is caring!

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *