بڑی مشکل حل ہوگئی

سعودی عرب واپسی کے منتظر ہزاروں غیر ملکیوں کی بڑی مشکل حل ہوگئی

ریاض (09 ستمبر 2021ء ) سعودی عرب واپسی کے منتظر غیر ملکیوں کی بڑی مشکل حل ہوگئی ، سعودی حکام کہتے ہیں کہ ایسے غیرملکی جو سفری پابندی کے باعث مملکت نہیں آسکتے ان کے اقامے اور خروج و عودہ ویزے کی خود کار طریقے سے توسیع کی جارہی ہے۔ عرب میڈیا کی رپورٹ سے معلوم ہوا ہے کہ سعودی محکمہ پاسپورٹ و امیگریشن (جوازات) سے جب ایک غیرملکی نے استفسار کیا کہ وہ خروج وعودہ پر مملکت سے گیا لیکن سفری پابندی کے باعث سعودی عرب نہیں لوٹ سکتا جب کہ اس دوران اس کے اقامے کی مدت بھی ختم ہوچکی ہے اور ابھی تک خودکار طریقے سے توسیع نہیں ہوئی تو اس صورت میں کیا کرنا ہوگا؟۔اس کے جواب میں جوازات نے وضاحت جاری کی ہے کہ سفری پابندی کے حوالے سے ممنوعہ ممالک کے اقامہ ہولڈرز غیر ملکی کارکنوں کے اقامہ اور خروج وعودہ کی مدت میں مرحلہ وار اور خود کارطریقے سے اضافہ کیا جارہا ہے ، جن غیرملکیوں کے اقامے اور ویزے کی توسیع نہیں ہوئی وہ اپنی باری کا انتظار کریں جلد ان کی دستاویزات کی بھی تجدید کردی جائے گی۔بتایا گیا ہے کہ سعودی حکومت کی جانب سے کورونا وباء اور پابندی کے پیش نظر مفت میں اقامے اور ویزے کی توسیع کی جارہی ہے تاہم ممنوعہ ممالک سے براہ راست آنے کی اجازت صرف اسی بنیاد پر ہے کہ مذکورہ ملکوں‌ کے مسافروں نے مملکت میں ویکسین کی دونوں خوراکیں لگوائی ہوں۔ علاوہ ازیں سعودی عرب کی جانب سے 3 ممالک کے شہریوں پر عائد سفری پابندیاں ختم کردی گئیں ، سعودی عرب نے بدھ 8 ستمبر سے متحدہ عرب امارات ، جنوبی افریقہ اور ارجنٹائن پر کورونا کی وجہ سے عائد کی گئی ‏سفری پابندیاں ختم کردی ہیں ، ان ممالک کے لوگوں کو ‏ہوائی اڈوں، بحری اور زمینی سرحدوں کے ذریعے مملکت کی جانب سفر کرنے کی اجازت دی گئی ہے جب کہ سعودی شہریوں کو بھی اجازت دے دی گئی ہے کہ وہ اب ان 3 ممالک کا سفر کر سکتے ہیں۔

Sharing is caring!

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *