عائد پابندی ختم کر دی گئی

دُبئی میں تمام ہوٹلز اور ریسٹورنٹس پر عائد پابندی ختم کر دی گئی

دُبئی(14 اگست 2021ء) متحدہ عرب امارات کو پچھلے ڈیڑھ سال سے کورونا وبا کا سامنا ہے جس کی وجہ سے فوڈ اور تفریحی سیکٹرز سخت پابندیوں کی زد میں آئے۔ آہستہ آہستہ یہ پابندیاں ختم کی گئی تھیں تاہم اب اس حوالے سے زیادہ اچھی خبر آ گئی ہے۔ دبئی محکمہ سیاحت و مارکیٹنگ نے ہوٹلوں کو سو فیصد گنجائش استعمال کرنے کی اجازت دی ہے۔اُردو نیو ز کے مطابق محکمہ سیاحت و مارکیٹنگ نے بیان میں کہا ہے کہ سیاحت کے شعبے کے لیے کورونا وائرس سے بچاوٴ کے نئے ضابطے تیار کیے گئے ہیں۔ تمام سرمایہ کاروں، ہوٹلوں، ریستورانوں اور سہولتیں فراہم کرنے والے اداروں کے منتظمین کو کہا گیا ہے کہ وہ 80 فیصد تک گنجائش استعمال کر سکتے ہیں۔دیگر شرائط مندرجہ ذیل ہیں:۔ٹیبلز کے درمیان فاصلہ ڈیڑھ سے دو میٹر تک کا رکھا جا سکتا ہے۔ ۔ وبا سے قبل کے اوقات کار بحال کیے جا سکتے ہیں۔ ۔ ریستوران اور قہوہ خانے صبح 3 بجے تک کاروبار کرسکتے ہیں ۔۔ تمام تفریحی مقامات، شو روم، عجائب گھروں، سینما گھروں اور سیاحتی سرگرمیوں سے منسلک اداروں کو 80 فیصد تک گنجائش استعمال کرنے کا اختیار دیا گیا ہے۔۔ کاروباری سرگرمیوں میں کورونا ایس او پیز کی پابندی کے ساتھ سو فیصد گنجائش استعمال کی جا سکتی ہے۔ ۔ بند مقامات پر سماجی پروگراموں میں شرکا کی تعداد 2500 تک کی اجازت دے دی گئی جبکہ کھلے مقامات پر 5 ہزار تک افراد جمع ہوسکتے ہیں- ویکسین کی پابندی ضروری نہیں ہوگی۔۔ ایسے تمام مقامات جہاں کھیلوں کے پروگرام اور تفریحاتی سرگرمیاں ہو رہی ہوں وہاں 60 فیصد تک گنجائش استعمال کی جا سکتی ہے۔ اس پر کوئی انتہائی حد مقرر نہیں- ویکسین کی پابندی بھی ضروری نہیں۔

Sharing is caring!

Comments are closed.