اقاموں کی تجدید نہ کروا سکے

سعودیہ میں ہزاروں پاکستانی بے روزگاری کا شکار،تنگدستی کی وجہ سے اقاموں کی تجدید نہ کروا سکے

ریاض(۔12 اگست 2021ء) سعودیہ میں مقیم ہزاروں پاکستانیوں نے وزیر اعظم اور وزیر خارجہ کو اپنے مسائل کے حوالے سے سعودی حکومت کے ساتھ بات کرنے کی اپیل کر دی۔ پاکستانیوں کی تنظیم پاک سعودی فورم نے اپیل میں کہا کہ پچھلے پانچ سالوں میں غیر مستحکم معاشی حالات اور دو سال سے زائد عرصہ سے کورونا جیسے موذی مرض کی وجہ سے کاروبار بند ہے۔ قومی اخبار کی رپورٹ کے مطابق لاک ڈاؤن کے باعث ہزاروں پاکستانی بے روزگاری کا شکار ہو گئے ہیں۔ تنگدستی کی وجہ سے یہ افراد اپنے اقاموں کی تجدید کی فیس ادا نہیں کر پائے۔ کئی پاکستانی مزدوروں پر 10 سے 15 ہزار ریال درہم کا اقامہ فیس کی تاخیر کا جرمانہ عائد ہو چکا ہے۔ انہیں موجودہ حالات میں مزدوری نہیں مل رہی، متعد د پراجیکٹس بند ہیں۔حکومت کو سعودی حکا م کے ساتھ مذاکرات کرے اور اقامہ فیسوں، جرمانوں میں کمی، اقامے کی تجدید کے حوالے سے خصوصی احکامات جاری کروائے۔سعودیہ میں پاکستانیوں کے لیے ویزوں میں کمی کر دی گئی ہے جب کہ بھارتیوں کے لیے اضافہ کیا گیا ہے۔ اگر پاکستانی حکومت سعودیہ کی اعلیٰ قیادت سے بات کرے تو معاملات حل ہو سکتے ہیں۔سعودیہ میں افواہیں گرم ہیں کہ 18 اگست سے پاکستانیوں سمیت ان تمام تارکین کے خلاف گرینڈ آپریشن کیا جائے گا جن کے اقاموں کی تجدید نہیں ہو سکی ہے۔ اس صورت حال نے پاکستانی تارکین کو شدید خوف میں مبتلا کر رکھا ہے۔

Sharing is caring!

Comments are closed.