مسافر کو بٹھانے پرایئرلائن کوجرمانہ ہوگا

غیرمجاز لیبارٹری کے ٹیسٹ والے یواے ای مسافر کو بٹھانے پرایئرلائن کوجرمانہ ہوگا
یواے ای سے آنے والے مسافروں کا مجاز لیبارٹریز سے ٹیسٹ قابل قبول ہوگا، پاکستان پہنچنے پر بھی مسافروں کا دوبارہ ٹیسٹ ہوگا، کورونا مثبت افراد کو قرنطینہ میں بھیجا جائے گا۔ وفاقی وزیر اسد عمر کی زیرصدارت این سی اوسی کا اجلاس

اسلام آباد ( 29 مئی2021ء) این اسی اوسی نے ایئرلائن کو غیرمجاز لیبارٹری کے ٹیسٹ والے یواے ای مسافر کو بٹھانے پرجرمانے کرنے کا فیصلہ کرلیا ہے، یواے ای سے آنے والے مسافروں کا مجاز لیبارٹریز سے ٹیسٹ قابل قبول ہوگا، پاکستان پہنچنے پر بھی مسافروں کا دوبارہ ٹیسٹ ہوگا، کورونا مثبت افراد کو قرنطینہ میں بھیجا جائے گا۔تفصیلات کے مطابق وفاقی وزیر اسد عمر کی زیرصدارت این سی اوسی کا اجلاس ہوا، جس میں کورونا ایس اوپیز اور ویکسی نیشن کا جائزہ لیا گیا۔ اجلاس میں ملک بھر میں کورونا کی صورتحال پراطمینان کا اظہار کیا گیا۔ این سی اوسی نے سندھ میں کورونا کے بڑھتے کیسز پر انتباہ جاری کیا۔ یواے ای سے آنے والے مسافروں کے صرف مجاز لیبارٹریز سے ٹیسٹ قابل قبول ہوں گے۔غیرمجاز لیبارٹری کے ٹیسٹ والے مسافر کو بٹھانے پر ایئرلائن کو جرمانہ ہوگا، پاکستان پہنچنے پر مسافروں کا دوبارہ ٹیسٹ ہوگا،کورونا ٹیسٹ مثبت آنے پر متاثرہ شخص کو قرنطینہ میں بھیجا جائے گا۔اسی طرح این سی اوسی نے اساتذہ اور عملے کیلئے ویکسی نیشن لازمی قرار دے دی ہے، اساتذہ اور عملے کو 10 جون تک ویکسی نیشن کروانا ہوگی۔ اجلاس میں فیصلہ کیا گیا کہ دسویں سے بارہویں جماعت کے امتحانات 23 جون سے 29 جون تک لیے جائیں گے۔ تعلیمی اداروں میں کلاسز کا اجراء کورونا ایس اوپیز کے تحت متبادل دنو ں میں کیا جاسکتا ہے۔ اسی طرح این سی اوسی نے کہا کہ 50 سال اور30 سال سے زائد عمر کے سیاحوں کیلئے ہوٹل میں قیام کیلئے ویکسی نیشن سرٹیفکیٹ لازمی ہوگا۔ سیاحت کیلئے ہوٹل میں قیام کیلئے ویکسی نیشن سرٹیفکیٹ کا اطلاق یکم جولائی سے ہوگا۔ 5 فیصد سے کم شرح والے اضلاع میں پارکس اور تفریحی مقامات 30 مئی سے کھل سکیں گے۔ سوئمنگ پول بھی 30 مئی سے کھولے جاسکیں گے۔

Sharing is caring!

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *