پروازیں بحال نہیں کرے گا

سعودیہ تمام ممالک کے لیے بین الاقوامی پروازیں بحال نہیں کرے گا
سعودی ایئر لائن العربیہ کا کہنا ہے کہ 17 مئی سے کچھ ممالک کو چھوڑ کر بین الاقوامی پروازوں بحال ہوں گی

ریاض( 21 اپریل2021ء) سعودی عرب کی جانب سے 17 مئی 2021ء کو بین الاقوامی پروازیں بحال کرنے کا اعلان کیا گیا ہے، تاہم کچھ ممالک ایسے ہوں گے جن کے مسافروں کے لیے سعودیہ جانے پر پابندی ہٹائی نہیں جائے گی۔ یہ بات سعودی عرب کی سرکاری ایئر لائن العربیہ نے بتائی ہے۔ سعودی ایئرلائنز کا کہنا ہے کہ بیرون ملک سفر کے لیے مختلف ممالک کے ساتھ پروازوں کی بحالی کی شرائط الگ ہوسکتی ہیں۔ کمپنی نے ایک سے زیادہ بار یہ بھی واضح کیا ہے کہ کچھ ممالک کو چھوڑ کر تمام بین الاقوامی پروازوں کی معطلی پیر 17 مئی 2021 سے ختم کردی جائے گی۔سعودی عرب سے بیرون ملک سفر کے دروازے کھولنے کے حوالے سے سعودی ایئرلائنزکے اعلان کے بعد میں اس حوالے سے سوشل میڈیا پر سوالات کا ایک طوفان اٹھ کھڑا ہوا ہے۔ لوگ اس امید کے ساتھ یہ پوچھنے لگے ہیں کہ کیا کرونا وبا کی کمر توڑ دی گئی ہے اور بین الاقوامی فلائٹ آپریشن معمول کے مطابق شروع ہونے جا رہا ہے۔ سعودی ایئرلائنز کی طرف سے 18 اپریل کو ٹویٹر پر ایک سوالیہ انداز میں ٹویٹ کرتے ہوئے لکھا کہ’کیا آپ نے تیاری کرلی ہے؟’۔ اس ٹویٹ کے بعد سوالات کا ایک نہ ختم ہونے والا سلسلہ شروع ہوگیا اور ابھی تک جاری ہے۔اگرچہ زیادہ تر سوالات ان ممالک کے بارے میں ہیں جن کے ساتھ سعودی عرب فضائی سروس بحال کرے گا۔ کمپنی نے اپنی ویب سائٹ پر استفسار کنندگان کومطمئن کرتے ہوئے کہا ہے کہ کمپنی ان تمام سفری ضروریات کو پورا کرے گی جو وبا کے بعد بین الاقوامی سفر کے لیے ضروری ہیں۔
سعودی ایئرلائنز کا کہنا ہے کہ بیرون ملک سفر کے لیے مختلف ممالک کے ساتھ پروازوں کی بحالی کی شرائط الگ ہوسکتی ہیں۔کمپنی نے ایک سے زیادہ بار یہ بھی واضح کیا ہے کہ کچھ ممالک کو چھوڑ کر تمام بین الاقوامی پروازوں کی معطلی پیر 17 مئی 2021 سے ختم کردی جائے گی۔العربیہ کا کہنا ہے کہ پروازوں کی بحالی کے حوالے سے تیاریاں ایک ہفتہ کے اندرمکمل ہو جائیں گی۔

Sharing is caring!

Comments are closed.