حکومت کو دھچکا

حکومت کو دھچکا ! اہم حکومتی رہنماء و رُکن اسمبلی نے بغاوت کر دی ، ٹی ایل پی سے پابندی ہٹانے کا مطالبہ

حکومتی ارکان اسمبلی بھی مذہبی جماعت کے حق میں بول پڑے،پاکستان تحریک انصاف کے ایم پی اے پارلیمانی سیکرٹری نذیر احمد چوہان نےمذہبی جماعت پرلگائی گئی پابندی کو فوراً ختم کرنے کا مطالبہ کردیا،نذیر چوہان کہتےہیں، مذہبی جماعت پر پابندی کا فیصلہ واپس نہ لیاگیا تو لاہور کے ارکان اسمبلی کا بڑا گروپ پارٹی سے علیحدگی کا اعلان کردیگا۔تفصیلات کے مطابق تحریک انصاف کے سینئر رکن اسمبلی نذیر احمد چوہان نے مذہبی جماعت سے دہشت گردی کے الزامات فوری ختم کئے جائیں ، وزیراعظم عمران خان سےگزارش ہے کہ وہ مذہبی جماعت پاکستان کے وفد سے خود ملاقات کریں ، ان کے تمام مسائل کا حل نکالیں،مطالبہ کرتے ہیں کہ مذہبی جماعت کے تمام کارکنان کو فوری رہا کیا جائے.اگر مذہبی جماعت کے تمام مسائل حل نہ کئے گئےتو پاکستان تحریک انصاف لاہور کا ایک بڑا گروپ پاکستان تحریک انصاف سے علیحدگی کا اعلان کر دے گا۔انہوں نے کہا کہ تمام عاشقان رسول صلی اللہ علیہ وسلم سے گزارش ہے کہ آج کے دن سے عہد کریں کہ یہودیوں کی بنائی ہوئی کوئی بھی پراڈکٹ استعمال نہیں کریں گے۔

 

Sharing is caring!

Comments are closed.