انجینئرز کی ٹیم اسٹیل مل پہنچ گئی

وزیراعظم عمران خان کے حکم پر انجینئرز کی ٹیم اسٹیل مل پہنچ گئی
پاکستان اسٹیل کے آکسیجن پلانٹ کی بحالی کیلئے تیاری مکمل، سٹیل مل بہت جلد آکسیجن کی پروڈکشن شروع کردے گی، ذرائع

اسلام آباد(26اپریل 2021) پاکستان اسٹیل کے آکسیجن پلانٹ کی بحالی کیلئے تیاری مکمل، وزیراعظم عمران خان کے حکم پر انجینئرز کی ٹیم اسٹیل مل پہنچ گئی، سٹیل مل بہت جلد آکسیجن کی پروڈکشن شروع کردے گی۔ تفصیلات کے مطابق ملک میں کورنا کی تشویشناک صورتحال میں آکسیجن کی قلت کا خدشہ پیدا ہونے کے پیشِ نظر پاکستان اسٹیل مل کودوبارہ بحال کرنے کے لیے اقدامات شروع کر دئیے گئے ہیں۔وزیراعظم عمران خان کے حکم پر انجینئرکی ایک ٹیم پاکستان اسٹیبل کے پلانٹ کا معائنہ کرنے پہنچ گئی ہے۔ یاد رہے کہ پاکستان اسٹیل ملز کے انجینئرز نے اسٹیل مل میں آکسیجن کے پروڈکشن کی بحال کے لیے وزیراعظم عمران خان کو خط ارسال کیا تھا۔ وزیراعظم عمران خان نے انجینئرز کےخط پر ردعمل دیتے ہوئے انجینئرز کی ٹیم روانہ کر دی ہے۔وزیر اعظم نے وفاقی وزیر پلاننگ و منصوبہ بندی اسد عمر کو پاکستان اسٹیل کے آکسیجن پلانٹ کے جائزے اور بحالی کا پلان مرتب کرنے کا ٹاسک سونپ دیا۔آکسیجن پلانٹ کی بحالی میں پاک فوج بھی حصہ لے گی۔ انجینئرنگ کور کے اعلیٰ افسران اور ماہرین منگل کو معائنہ ٹیم کا حصہ ہوں گے۔واضح رہے کہ نیشنل انجینئرز ویلفئیر ایسوسی ایشن کا کہنا ہے کہ اسٹیل مل کے ایک پلانٹ سے یومیہ 25 ہزار سلنڈرز بھرے جاسکتے ہیں۔ وزیراعظم عمران خان کو لکھے گئے خط میں کہا گیا کہ پاکستان اسٹیل میں 260 ٹن یومیہ کے دو پلانٹ نصب ہیں، یورپی ساختہ پلانٹس میں سے ہر ایک پلانٹ فی گھنٹہ 7500 کیوبک میٹر آکیسجن پیدا کرسکتا ہے، جب کہ ایک پلانٹ سے یومیہ 25 ہزار سیلنڈرز بھرے جاسکتے ہیں، نیشنل انجینئرز اپنے وسیع تجربے کو بروئے کار لاتے ہوئے آکیسجن پلانٹ کی بحالی کے اپنی خدمات فراہم کریں گے۔

Sharing is caring!

Comments are closed.