ویکسین لگوانے والوں کے لیے ہدایات جاری کر دیں

سعودیہ نے رمضان المبارک میں ویکسین لگوانے والوں کے لیے ہدایات جاری کر دیں
ویکسین لگوانے والے پانی ، پھلوں کے رس، سُوپ، سبز چائے، دارچینی ادرک کا استعمال زیادہ کریں

ریاض(21 اپریل2021ء) سعودی عرب میں رمضان المبارک کے دوران بھی ویکسی نیشن کا عمل تیزی سے جاری ہے۔ اس کی ایک بڑی وجہ یہ بھی ہے کہ رمضان کے مہینے میں کورونا کیسز میں بہت زیادہ اضافہ ہو گیا ہے۔ آٹھ ماہ کے بعد پہلی بار کورونا کے یومیہ کیسز ایک ہزار سے زائد ہو چکے ہیں۔ جس کے بعد حکام نے لاک ڈاؤن لگانے کا عندیہ بھی دے دیا ہے۔کورونا کیسز کی بڑی وجہ لوگوں کی بڑی لاپرواہی ہے۔مساجد میں بھی نمازیوں میں کورونا کے کیسز میں اضافہ ہو رہا ہے۔ روزانہ درجنوں مساجد عارضی طور پر بند کر دی جاتی ہیں۔ جنہیں سینیٹائزیشن کے بعد کھولا جاتا ہے۔ اُردو نیوز کے مطابق مقامی شہریوں اور مقیم غیرملکیوں کی اچھی خاصی تعداد رمضان کے دوران کورونا ویکسین لگوانے میں دلچسپی ظاہر کررہی ہے۔وال یہ ہے کہ کیا رمضان میں ویکسین لی جاسکتی ہے۔ کیا اس حوالے سے کوئی پابندی یا احتیاط تو ضروری نہیں۔ اس سوال کا جواب ماہرین صحت سے دریافت کرکے پیش کیا گیاہے۔ماہرین صحت کہتے ہیں کہ ویکسین کے خواہشمند افراد کو کھانے پینے کے سلسلے میں کئی پابندیوں کا خیال رکھنا ہوگا۔رمضان میں ویکسین لینے کے لیے جسم کو تروتازہ رکھنا ہوگا۔ روزہ دار یہ ہدف افطار اور سحری کے دوران پانی اور سیال غذائیں استعمال کرکے حاصل کرسکتے ہیں۔خصوصا پھلوں کا رس سوپ، جڑی بوٹی والی چائے، سبز چائے، ادرک اور دارچینی استعمال کریں- ان سے جسم تروتازہ رہتا ہے۔ کورونا ویکسین لینے والے کے لیے مدافعتی نظام بہتر بنانے میں ان کا کردار بڑا اہم ہے۔ ماہرین کا کہنا ہے کہ پانی ترجیحی بنیادوں پر استعمال کریں۔ خواتین روزانہ کم از کم دو لٹر اور مرد تین لٹر پانی ضرور پئیں۔ دھوپ میں نکلنے کی صورت میں پانی کی مقدار بڑھا دیں۔ سبزیاں، پھل اور ہلدی زیادہ سے زیادہ استعمال کریں۔ ان سب سے مدافعتی نظام مضبوط ہوتا ہے۔ کورونا ویکسین لینے سے قبل ان اشیا کے استعمال سے روزے دار کا جسم ویکسین کے لیے تیار ہوجاتا ہے۔

Sharing is caring!

Comments are closed.