عدلیہ ساتھ نہیں دے گی

عدلیہ ساتھ نہیں دے گی، تو ہم کرپشن سے نہیں لڑسکتے، عمران خان

ہم نوازشریف سے7 ارب کا ضمانتی بانڈمانگ رہے تھے، لیکن ججز نے باہر بھیج دیا، کرپشن بچانے کیلئے مظاہرے کررہے ہیں، عمران خان کی حکومت گرا دو، کیونکہ این آراو نہیں دے رہا۔ وزیراعظم عمران خان کی عوام کی براہ راست بات چیت
وزیراعظم عمران خان نے کہا ہے کہ عدلیہ ساتھ نہیں دے گی، تو ہم کرپشن سے نہیں لڑسکتے، ہم نوازشریف سے 7ارب کا ضمانتی بانڈمانگ رہے تھے، ججز نے باہر بھیج دیا،کرپشن بچانے کیلئے مظاہرے کررہے ہیں، عمران خان کی حکومت گرادو،کیونکہ این آراو نہیں دے رہا۔انہوں نے ٹیلی فون پر براہ راست عوام کے سوالات کے جوابات دیتے ہوئے کہا کہ کرپشن ایک ایسی کینسر ہے جو صرف پاکستان میں نہیں بلکہ ہر غریب ملک میں پھیلی ہوئی ہے، کرپشن امیر ملک کو تباہ کردیتی ہے، ملائیشیاء کو مہاتیر محمد 500ڈالر سے آمدن کو اٹھا کر 9ہزار ڈالر پر لے گیا، وہاں کرپٹ وزیراعظم آگیا اور ملک کو مقروض کردیا، ایک حکمران کرپشن کرتا ہے، اقتدار میں آکر پیسا چوری کرتے ہیں اور حوالہ ہنڈی سے باہر آف شور اکاؤنٹس میں بھیجتا ہے، منی لانڈرنگ کرتے ہیں، محلات بناتے ہیں۔غریب ملکوں سے سالانہ ایک ہزار ارب ڈالر چوری ہوکر امیر ملکوں میں جاتا ہے، کمپنیز کے نام پر جہاں پیسا چھپایا جاتا ہے، ہماری طرح کے ملکوں کا 7ہزار ارب ڈالر باہر پڑا ہوا ہے، ہم پورا زور لگا رہے ہیں ہمارے ممالک کا پیسا واپس کریں، لیکن طاقتور ممالک کا فائدہ ہے وہ واپس نہیں کرتے، وہاں روزگار ہے ، لیکن یہاں تباہی ہے،کرپشن قانون سے نہیں لڑی جاتی، کرپشن قوم لڑتی ہے، غربت بڑھ جاتی ہے، عمران خان اکیلا کرپشن سے نہیں لڑ سکتا، عدلیہ نے کرپشن سے لڑنا ہوتا ہے، کئی آپ کے سامنے ہے، ایک مجرم کو ہم کہہ رہے 7ارب کا ضمانتی بانڈ دیں، لیکن ججز نے اس کو باہر بھیج دیا، عدلیہ ساتھ نہیں دے گی، تو ہم نہیں لڑسکتے، نیب نے کیسز بنانے ہوتے ہیں وہ ہمارے ہاتھ میں نہیں ہے، مہذب معاشرے کیسے کرپشن کی جنگ جیتتے ہیں؟ سنگاپور میں ایک وزیر نے کرپشن کی تو اس نے خود کشی کرلی، کیونکہ معاشرے میں ایسے بندے کو جگہ نہیں دی جاتی، لیکن یہاں کرپٹ لوگوں کو شادیوں پر بلایا جاتا ہے، نیب جیل سے کوئی کرپٹ باہر آتا ہے تو اس پر پھول نچھاور کرتے ہیں جیسا کوئی بڑا معرکہ مارا ہے، ہم نے جنگ جیتنی ہے، قانون سب سے بالا ہے۔

Sharing is caring!

Comments are closed.