سعودی عرب میں اہم ترین شعبے میں نوکریاں ہی نوکریاں مملکت میں مقیم ملکی اور غیر ملکیوں کو خوشخبری سُنادی گئی

سعودی عرب میں ہیلتھ سیکٹرمیں لاکھوں ملازمتیں پیدا ہوں گی
ایک رپورٹ کے مطابق مملکت کو ہزاروں ماہر ڈاکٹروں،لاکھوں طبی کارکنان اور 20 ہزار نئے بیڈز کی بھی ضرورت ہے

سعودی عرب میں ہیلتھ کیئر کے شعبے میں اگلے چار سالوں کے دوران لاکھوں نئی ملازمتیں پیدا ہونے کا امکان ہو گیا ہے۔ جس کی ایک بڑی وجہ صحت کے معاملے میں سعودی عرب میں طبی سہولتوں کا عالمی معیار کے مطابق نہ ہونا ہے۔ایک کنسلٹنسی فرم فروسٹ اینڈ سلیون نے نے خصوصی رپورٹ میں بتایا ہے کہ موجودہ انفراسٹرکچر سعودی ہیلتھ کیئر نظام کے لیے اب بھی ایک چیلنج ہے۔اُردو نیوز کے مطابق سعودی عرب میں ایک ہزار افراد کے لیے دو اعشاریہ دو پانچ بستر ہیں جو عالمی ادارہ صحت کی سفارش کے مطابق ایک ہزار افراد کے لیے 5 بستر سے 50 فیصد سے کم ہیں۔سعودی عرب اپنی ہیلتھ کیئر انڈسٹری کو فروغ دینے کے لیے نجی شعبے پر انحصار کرتا ہے اور 2030 تک اس کے اخراجات میں 65 فیصد تک اضافہ کرنے منصوبہ رکھتا ہے۔

Sharing is caring!

Comments are closed.