مراعاتی پیکیجز کی منظوری دے دی

سعودی فرمانروا نے حج و عمرہ سیکٹر کے متاثرہ افراد اور اداروں کے لیے مراعاتی پیکیجز کی منظوری دے دی
کورونا وبا کے باعث معاشی بدحالی کے شکار افراد کو رہائشی لائسنس کی فیس معاف کر دی گئی، ٹرانسپورٹ بسوں کے پرمٹ میں بھی توسیع کر دی گئی

ریاض(9 مارچ2021ء) خادم الحرمین الشریفین شاہ سلمان بن عبدالعزیز آلِ سعود نے کرونا وبا کی وجہ سے حج وعمرہ سیکٹر کے متاثرہ افراد اور اداروں کے لیے مراعات اور سہولیات پرمبنی متعدد نئے اقدامات کی منظوری دی ہے۔ ان اقدامات میں متعدد شعبوں میں حجاج اور معتمرین کو سروسز فراہم کرنے والے اداروں اور افراد کو سالانہ فیسز اور ٹیکسوں میں چھوٹ دینے کے اقدامات شامل ہیں۔ العربیہ نیوز کے مطابق یہ سہولیات حج وعمرہ سروسز سے متعلق ان اداروں کو فراہم کی جا رہی ہیں جو کرونا وبا کی وجہ سے معاشی طور پر زیادہ متاثر ہوئے ہیں۔یہ اقدامات حج اور عمرہ کے شعبے میں کام کرنے والے اداروں اور وبائی بیماری کی وجہ سے سب سے زیادہ متاثر ہونے والے افراد کی معاشی سہولیات کے لیے مْملکت کی وسیع تر کوششوں کا حصہ ہیں۔ شاہ سلمان نے درج ذیل اقدامات کی منظوری دی۔ مکہ مکرمہ اور مدینہ منورہ ایک سال میونسپل تجارتی سرگرمیوں کے لیے لائسنسوں میں سالانہ فیس سے رہائش کی سہولیات کی فیس سے مستثنیٰ قرار دیا گیا ہے۔حج اور عمرہ سیکٹر کے اداروں کو چھ ماہ کی مدت کے لیے کام کرنے والے تارکین وطن کی فیس کی چھوٹ دی گئی ہے۔وزارت سیاحت کے لیے ایک سال کی مدت تک مکہ مکرمہ اور مدینہ منورہ شہروں میں رہائش کی سہولیات کے لیے کسی فیس کے بغیر لائسنسوں کی تجدید کی جائے گی۔

Sharing is caring!

Comments are closed.