بیوی یہ ایک تسبیح پڑھ کر سو جائے

شوہر بیوی کی ہربات مانے گا! رات کو بیوی یہ ایک تسبیح پڑھ کر سو جائے انشاء اللہ شوہر شوہر بیوی کی ہربات مانے گا! رات کو بیوی یہ ایک تسبیح پڑھ کر سو جائے انشاء اللہ

اگرآج ہم پانے معاشرے میں دیکھیں ہر گھرمیں میاں بیوی کی لڑائی اوراکثرعورتوں کویہ گلہ ہوتا ہے کہ ہمارے جو شوہر ہیں دوسری عورتوں میں دلچشبی لیتے ہیں دوسری عورتوں میں رجوع زیادہ ہوتے ہیں اوراپنی بیویوں کو کم تر سمجھتےہیں آج یہ کس وجہ سےاکثر گھروں میں پریشانی بنی ہوئی ہےاس کاسب سےبرامسئلہ یہ ہے کہ آج ہم نے نبی اکرم صلی الله علیه وسلم  کےکام کو بولا دیا ہے آج نبی صلی الله علیه وسلم  کی سنت کواپنے گھروں اپنےدلوں سے نکال دیا ہے ہم نے یہی وجہ ہے کہ لڑائی جگڑے عام ہو رہے ہیں اگرہم سنت نبوی کواپنا لیں مکمل ویڈیودیکھنےکےلیےنیچےویڈیوپرکلک کرکےویڈیودیکھیں تو اسی میں کامیابی ہے ایسی پر نسل پروان چڑھتی ہے ایک لڑکی مولانا کے پاس آیا لڑکا پڑھائی میں نمبر ون پر آتا کہتا ہے مالانہ صاحب میں نے دو دفعہ خود خوشی کی کاشش کی ہے میں نے پوچھا کیوں کہتا ہے مولانا صاحب میرے امی ابو بہت لڑتے ہیں ان کی لڑائی سے میں اتنا تنگ ہو میں نے دو دفعہ اپنے آپ کو مارنے کی کوشش کی ہے لیکن میری زندگی تھی اللہ نے مجھے بچا لیااپنے گھروں کو اگر اچھی طرح چلانا ہے تو نبی صلی الله علیه وسلم والے اخلاق ہم کو سیکھنے پریں گے ہمارے نبی صلی الله علیه وسلم نے انتی شادیاں کیوں کی شادیاں اس لیے کی کہ ہم کو بتایا جا سکے کے زندگی کیسے گزارنی ہے غصے والی عورت زندگی کیسے گزارنی ہے اپنے خاندان والی عورت زندگی کیسے گزارنی ہے مالدار عورت زندگی کیسے گزارنی ہے اپنے سے بڑی عورت زندگی کیسے گزارنی ہے کنواری عورت زندگی کیسے گزارنی ہےبےوا سے شادی زندگی کیسے گزارنی ہے تلاق یافتہ سےشادی زندگی کیسے گزارنی ہے یہ سب میرے نبی کے بتائے ہوے زندگی کے درس ہیں۔ حضرت میمونہ کے گھر آپ سوئے ہوے ہیں بیشاب کرنے کے لیے آپ باہر نکلے حضرت میمونہ کی آنکھ کھل گئے انہوں نے دیکھا بستر خالی ہے انہوں نے سوچا مجھے چھوڑ کر دوسری بیوی کے پاس چلے گئے ہیں غصہ میں آگئ اور کنڈی لگا دی اللہ کے نبی واپس آگئے آپ نےدستک دی دروازہ کھولو کہتی ہے میں نہیں کھولتی کہا کیوں حضرت میمونہ نے کہا آپ مجھے چھوڑ کر دوسری بیگم کے پاس چلے گئے کہا تم نے غلط سوچ لیا میں نہی کسی کے پاس گیا میں اللہ کا رسول ہوں حضرت میمونہ نے ڈرتے دروازہ کھولا کہ پتہ نہیں آپ کیا کریں گے آپ مسکرا کہ اندر داخل ہوئے اور مسکرا کہ اندر لیٹ گئےیہ ہے ہمارے نبی کے اخلاق میاں بیوی کے آپس میں لڑائی کی وجہ وہ منفی خیالات ہوتے ہیں جو لڑائی کی وجہ بنتے ہیں وہ منفی خیالات ہوتے ہیں انسان کے کسی غلط فہمی کی وجہ سے ان ساری وجوہات سے اگر آپ نجات چاہتے ہیں تو آپ کو قرآن کی مدد لینی پرے گی آپ کو سنت کی مدد لینی ہو گی آپ کو نبیوں والے اخلاق سیکھنے ہوں گے قرآن پاک کا ہر لفظ حکمت کے خزانوں سے برا پرا ہے اللہ پاک نے قرآن مجید میں ایک سو چودہ سورتیں نازل فرمائی جو کہ علم کے سمندر سے لبریز ہیں ان میں سے ایک سورۃ سورۃ اخلاص ہے سورۃ اخلاس نہایت ہی مختصر سی صورت ہے لیکن معانی کے حساب سے جامع سورۃ ہے اللہ تعالی نے اس مختصر سی سورۃ میں اپنی واحدانیت کو بیان فرمایا ہے سورۃ اخلاص بےشمار فوائد اور برکات کی خامی سورۃ ہے یہ سورۃ بہت سارے روحانی جسمانی اور زہنی مسائل اور پریشانی سے نجات حاصل کرنے کے لیے اکثیر کا درجہ رکھتی ہے آج میں آپ کو سورۃ اخلاص کاایک ایسا وظیفہ بتانے جا رہا ہوں

 

Sharing is caring!

Comments are closed.