سعودی عرب قرض کے معاملے میں پاکستان

سعودی عرب قرض کے معاملے میں پاکستان کو بڑا ریلیف دینے کے لیے تیار ہو گیا
ایک ارب ڈالر پر پاکستان کو تین فیصد سود ادا کرنا پڑے گا

اسلام آباد ( 06 فروری2021ء) جب پی ٹی آئی حکومت اقتدار میں آئی تھی تب شور بلند ہو گیا تھا کہ خزانہ خالی ہے خزانہ خالی ہے لہٰذا سب سے پہلے سعودی عرب کی طرف سے تین ملین ڈالر کی رقم ملی تھی جس سے حکومت کا پہیہ کچھ رواں ہوا تھا۔مگر ابھی یہ قرض واپس کرنے کی مہلت رہتی تھی کہ گزشتہ سے پیوستہ ماہ سعودی عرب نے اپنا قرض واپس مانگ لیا تھا کہ پاکستان نے قرض واپس کرنے پر ساری توجہ مرکوز کر لی ہوئی تھی۔ مگر ابھی خبر آئی ہے کہ سعودی عرب پاکستان کو مزید مہلت دینے کے لیے رضامند ہو گیا ہے۔اطلاعات کے مطابق سعودی عرب اور یو اے ای قرض کی ادائیگی میں پاکستان کو ریلیف دینے کے لئے تیار ہوگئے۔ یو اے ای سے ایک ارب ڈالر قرض ادائیگی میں ایک سال کی مہلت مل گئی۔ ذرائع وزارت خزانہ کے مطابق سعودی عرب کی رضامندی پر رواں ماہ دونوں ممالک کے درمیان معاہدہ ہوجائے گا۔ سعودی عرب اور یو اے ای قرض کی ادائیگی میں پاکستان کو ریلیف دینے کو تیار ہوگیا۔ذرائع کے مطابق متحدہ عرب امارات نے قرض کی ادائیگی میں ایک سال کا ریلیف دے دیا جبکہ سعودی عرب سے ایک ارب ڈالر قرض ادائیگی موخر کرنے کی بات چیت جاری ہے۔ذرائع کا کہنا ہے کہ سعودی عرب کی رضامندی پر رواں ماہ دونوں ممالک میں معاہدہ ہوجائے گا۔سعودی عرب کو ایک ارب ڈالر پر پاکستان تین فیصد سود ادا کرے گا۔

Sharing is caring!

Comments are closed.