ایک ہفتے کے اندر ویزے جاری ہوں گے

سعودی عرب میں پاکستانی سفارت خانے اور قونصلیٹ نے مینوئل ویزوں کا اجراء بند کر دیا 31 جنوری کے بعد سے آن لائن درخواست کے بعد ایک ہفتے کے اندر ویزے جاری ہوں گے

ریاض ( ۔یکم فروری2021ء) سعودی عرب میں پاکستانی سفارت خانے اور قونصلیٹ نے مینوئل ویزوں کا اجراء بند کر دیا ہے۔ اب آئندہ سے آن لائن ویزے جاری ہوں گے۔ مینوئل ویزوں پر یہ پابندی سعودی عرب سمیت دُنیا بھر کے پاکستانی سفارت خانوں اور قونصل خانوں میں بھی عائد کر دی گئی ہے، جس کی ہدایات پاکستان کی وفاقی وزارت داخلہ کی جانب سے کی گئی تھیں۔ جدہ میں واقع پاکستانی قونصل خانے اور ریاض میں پاکستانی سفارت خانے کی جانب سے جاری الگ الگ بیانات میں پاکستانی ویزہ کے حصول کے خواہش مندوں سے کہا گیا ہے کہ آئندہ سے مینوئل ویزوں کا اجراء نہیں ہو گا۔ جو لوگ ویزہ حاصل کرنا چاہتے ہیں انہیں آن لائن ویزہ پورٹل پر اپلائی کرنا ہو گا۔ آج یکم فروری کے روز سے ویزے کے لیے آن لائن درخواستیں دینا ہوں گی۔ درخواست ملنے کے بعد ایک ہفتے کے اندر اندر ویزہ پراسس مکمل ہو جایا کرے گا۔ مینوئل ویزے پر پابندی کا فیصلہ وفاتی وزیر داخلہ شیخ رشید کی جانب سے کیا گیا ہے۔ جنہوں نے چند روز اعلان کیا گیا تھا کہ اب دُنیا کے 152 ممالک کے باشندوں کے لیے پاکستان کا آن لائن ویزہ جاری ہوا کرے گا۔ واضح رہے کہ پاکستانی سفارت خانے اور قونصل خانے کی جانب سے آگاہ کیا گیا ہے کہ اگر کسی پاکستانی کو اس کی کمپنی یا کفیل تنخواہ کی ادائیگی نہیں کر رہا تو وہ سعودی وزارت افرادی قوت کی عدالت میں کیس دائر کر دے ۔ سعودی قانون کے مطابق اگر کسی کارکن کو 3 ماہ تک اجرت ادا نہیں کی جاتی تولیبر کورٹ کی جانب سے اس کارکن کے کفیل کو تبدیل کرنے کا حکم جاری کر دیا جاتا ہے۔ اگرسعودیہ میں مقیم کسی کارکن کو ایسی کسی پریشانی کا سامنا ہے تو وہ ریاض میں پاکستانی سفارت خانے یایا جدہ ریجن کے قونصلیٹ کے شعبہ ویلفئیر سے رجوع کر کے وہاں اپنی درخواست جمع کرائے جس میں تمام حالات اور مسائل تفصیلی طور پر درج ہوں۔ ویلفئیر سیکشن کے ذریعے کمپنی سے رابطہ کر کے معاملہ حل کرایاجاسکتا ہے۔تاہم اگر کوئی کارکن براہ راست لیبر کورٹ سے رجوع کرنا چاہتا ہے تو وہ وزارت افرادی قوت کی ویب سائٹ کے ذریعے اپنا کیس دائر کرسکتا ہے۔

Sharing is caring!

Comments are closed.