ایمریٹس ایئر لائنز کے بعد فلائی دُبئی نے بھی مسافروں کو اچھی خبر سُنا دی 

ایمریٹس ایئر لائنز کے بعد فلائی دُبئی نے بھی مسافروں کو اچھی خبر سُنا دی

فلائی دُبئی پر سفر کرنے والے افراد کے کورونا کا شکار ہونے پر ان کے تمام اخراجات برداشت کیے جائیں گے، قرنطینہ کا تمام خرچہ بھی ایئر لائن کی ذمہ داری ہو گی
دُبئی جولائی 2020ء میں ایمریٹس ایئر لائنز کی جانب سے اپنے تمام مسافروں کو یہ خوش خبری سُنائی گئی تھی کہ وہ اپنے تمام مسافروں کو کورونا کا شکار ہونے پر ان کا علاج مفت کروائے گی اور ان کے 14 روز کے قرنطینہ کے اخراجات بھی برداشت کیے جائیں گے۔ اس اقدام کا مقصد لوگوں کو کورونا کے خوف سے نکالنا اور لوگوں کو زیادہ سے زیادہ ایمریٹس کے ذریعے سفر کرنے کی ترغیب دینا تھا۔
اب فلائی دُبئی کی جانب بھی اعلان کیا گیا ہے کہ وہ دُنیا بھر کے تمام مسافروں کو کورونا سے متعلق انشورنس کی سہولت دے رہی ہے۔ فلائی دُبئی نے اعلان کیا ہے کہ یکم ستمبر سے 30 نومبر 2020ء کے درمیان اس کی تمام پروازوں کے ذریعے سفر کرنے والوں کوکورونا انشورنس کی سہولت حاصل ہو گی۔ اگرکسی مسافر میں پرواز کے بعد اگلے 31 روز کے اندر اندر کورونا کی تشخیص ہو جاتی ہے تو ایسی صورت میں اس کے علاج کے تمام اخراجات ایئر لائن اُٹھائے گی، جس کے لیے ڈیڑھ لاکھ یورو (6 لاکھ 60 ہزار درہم)کی حد مقرر کی گئی ہے اسی طرح اگر کسی مسافر کو قرنطینہ میں جانا پڑتا ہے تو ایئر لائن کی جانب سے 14 روز کے قرنطینہ کے لیے یومیہ 100 یورو (440 درہم) بھی فلائی دُبئی برداشت کرے گی۔ یہ سہولت دُنیا بھر کے ان تمام باشندوں کو حاصل ہو گی جو فلائی دُبئی کی پرواز سے سفر کریں گے۔ فلائی دُبئی کے چیف کمرشل آفیسر حماد عبید اللہ کا اس حوالے سے کہنا تھا کہ مسافروں اور عملے کی صحت کی حفاظت ہماری پہلی ترجیح ہے۔ اسی وجہ سے کورونا کی وبا کے دوران یہ سہولت فراہم کی جا رہی ہے۔ اس شاندار اعلان سے زیادہ سے لوگ فلائی دُبئی سے سفر کرنے کے لیے تیار ہوں گے۔

Sharing is caring!

Comments are closed.