ریحام خان اور بشریٰ بی بی سے نکاح وزیراعظم عمران خان نے میرے مشورے پر کیا

’’ریحام خان اور بشریٰ بی بی سے نکاح وزیراعظم عمران خان نے میرے مشورے پر کیا۔۔‘‘ معروف عالم دین نے لائیو پروگرام میں تہلکہ خیز انکشاف کردیا

اسلام آباد (ویب ڈیسک) مجھے افسوس کیساتھ کہنا پڑ رہا ہے کہ ہماری اسلامی نظریاتی کونسل جس کا خرچ لاکھوں روپے ماہانہ ہے ، پچھلے دو سالوں میں وہ فیصلہ نہیں کر سکے کہ دوسری شادی کیلئے پہلی بیوی کی اجازت لینا ہے یا نہیں ۔ ایک پروگرام میں مفتی عبد القوی نے کہا ہے کہ
سپریم کورٹ کادوسری شادی سے متعلق فیصلہ میرے پاس آیا تو بے شمار لوگوں کے میرے پاس سوالات کا انبار لگ گیا۔میں یہی سمجھتا ہوںکہ شریعت کے مطابق دین اسلام کی روح کے مطابق کیونکہ میرے دین رحمت کے مطابق اس کے اندر ظلم نہیں ہے ، میں اپنی پہلی بیوی کا حق مہر بھی ادا نہیں کرتا ، پھر پہلی بیوی کے اوپر سوکن بھی لے کر آتا ہوں ، حالانکہ حق مہر جب رخصتی ہوتی ہے اس سے قبل ہی ادا کر دینا چاہیے ۔ ان کا کہنا تھا کہ سپریم کورٹ کا فیصلہ بالکل دین اسلام کی روح کے مطابق ہے ۔ مفتی عبدالقوی کا کہنا تھا کہ 2012میں تحریک انصاف میں شمولیت اختیار کی ، وزیراعظم عمران خان کی شادی سے متعلق ان کا کہنا تھا کہ میں نے عمران خان سے کہا کہ آپ کی وہ پہلی شادی تھی جس میں سے اللہ پاک نے آپ کو دو بچے دیئے ، اب آپ نے نکاح کرنا ہے جو کہ بداخلاقی اوربدکرداری کا دروازہ بند کر نے کیلئے ضروری ہے کیونکہ ہر وہ محترمہ جو آپ سے دلچسپی رکھے یا آپ اس سے دلچسپی رکھیں دو گواہ موجود ہوں اس کیساتھ آپ نکاح کر لیں ، اسی کی برکت سے ریحام بی بی سے نکاح ہواتھا، آج بشریٰ بی بی وزیراعظم عمران خان کے نکاح میں موجود ہیں ۔

Sharing is caring!

Comments are closed.