مال مویشی، زرعی زمین بیچ کر بھی بچے کا علاج ممکن نہ ہو سکا،بلڈ کینسر میں مبتلا بچے کے غریب والدین نے حکومت سے علاج کرانے کی اپیل کر دی

میرپور ماتھیلو(این این آئی)میرپور ماتھیلو کے نواحی گاؤں صبڑ بوذدار کا گیارہ سالہ بچہ سات سال سے بلڈ کینسر جیسے موذی مرض میں مبتلا بچے کے غریب والدین نے جمع پونجی، مال مویشی، زرعی زمین بیچ کر لاکھوں روپے علاج پر لگا دیئے لیکن بچہ ٹھیک نہ ہوسکا، وائیٹ سیلز کی تعداد چار لاکھ سے کم ہو کر تیس ہزار رہ گئی ورثا علاج کے لئے مسیحا کے منتظر، تفصیلات کے مطابق گاں صبڑ بوذدار کے رہائشی گاہی بوذدار کا گیارہ سالہ بیٹا غلام یاسین سات سال سے موذی مرض بلڈ کینسر میں مبتلا ہے والد گاہی بوذدار کے مطابق میں

 

Sharing is caring!

Comments are closed.